46

تعلیمی اداروں میں خدمات انجام دینے والے ٹیچرس کو 2 ہرار اور 25 کیلو چاول

ریاست میں کورونا وائرس کے دوبارہ پھیلاؤ کے تناظر میں تعلیمی اداروں کو عارضی طور پر بند کردئے جانے کے سبب مشکل حالات سے نبرد آزما مسلمہ خانگی تعلیمی اداروں کے اساتذہ و دیگر عملہ کو دو ہزار روپئے مالی امداد و نیز راشن شاپس کے ذریعہ فی گھرانہ 25 کلو چاول مفت مہیا کرنے کا وزیراعلی جناب کے چندرشیکھرراؤ نے اعلان کیا ہے۔

وزیراعلیٰ نے کہا کہ خانگی تعلیمی اداروں میں خدمات انجام دے رہے اساتذہ اور دیگر غیر تدریسی عملے کو چاہئے کہ وہ حکومت کی جانب سے دی جارہی اس امداد سے استفادہ کے لئے اپنے بینک کھاتہ کی تفصیلات اور دیگر متعلقہ تفصیلات کے ساتھ مقامی ضلعی کلکٹر کے ہاں درخواست داخل کریں۔

اس خصوص میں کل صبح ساڑھے گیارہ بجے بی آر کے بھون میں ایک خصوصی ویڈیو کانفرنس منعقد کرنے کی وزیراعلی نے وزیر تعلیم شریمتی اندرا سبیتا ریڈی، وزیر محکمہ سیول سپلائز شری جی کملاکر اور حکومتی مشیر شری راجیو شرما کو ہدایت دی۔ مذکورہ ویڈیو کانفرنس میں تمام اضلاع کے کلکٹرس، ڈسٹرکٹ ایجوکیشن آفیسرز اور محکمہ سیول سپلائز سے وابستہ ڈی ایس اوز و نیز دیگر متعلقہ عملہ شریک رہے گا۔ اس سلسلے میں رہنمایانہ خطوط پر عمل آوری و نیز متعلقہ ایکشن پلان کے نفاز سے متعلق احکامات جاری کردیے جائیں گے۔
وزیراعلی نے کہا کہ حکومت نے انسانی ہمدردی کے جذبہ کے ساتھ یہ فیصلہ لیا ہے اور حکومت کے اس فیصلے کے چلتے ریاست بھر میں مسلمہ خانگی تعلیمی اداروں میں خدمات انجام دے رہے تقریباَ 1 لاکھ 50 ہزار تدریسی و غیر تدریسی عملہ کو راست فائدہ پہنچے گ

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں