126

پہلے اوم، پھر شنک، اب کیا گھنٹہ باقی ہے۔۔۔؟

پہلے اوم، پھر شنک، اب کیا گھنٹہ باقی ہے۔۔۔؟


حیدر آباد ۔/20 مارچ(سفیر نیوز)دو دن قبل عاشو ر خانہ حضرت عباس پلٹن قلعہ گول کونڈہ میں ایک شخص نے 4 شعبان کو شنک کا سرُ پھونکا تھا۔ جس کی ویڈیو وائرل ہوگئی اور شیعہ و سنی سبھی مسلمانوں نے اس پر ا حتجاج کیا اور بتایا کے مند ر میں بجنے والا شنک جو وشنو بھگوان اور دیوی لکشمی سے مخصوص ہے۔اس کو کیوں بارگاہ حضرت عباس میں بجایا گیا…؟اگر یہ مندر میں ہو تو کسی کو اعتراض نہیں مگر مسلمانوں کی عبادت کی جگہ میں اسکی اجازت نہیں ہیں۔ اس طرح لوگوں نے مجاور قیصر نامی شخص جو اہل سنت سے تعلق رکھتے ہیںمقامی مسلمانوں نے اس سے جواب طلب کیا۔اس پر قیصر نے بتایا کے ہماری اجازت نہیں تھی اور نا رہیگی۔انہوں نے مزید بتایا کے یہ ا شتیاق نامی شخص ہے جو وحید الدین کا آدمی ہے ۔وحیدالدین جو حضرت علی کو اوم اور اوم کو علی کہتا ہے۔ ا حتجاج کرنے والے کافی برہم نظر آئے جو ویڈیو وائرل ہو ئی ہے ۔زائرین کا کہنا ہے کے کیا اب گھنٹہ بھی لگا دیا جائیگا..؟۔اب دیکھنا ہے کے علماء اس نئی بدعت پر کیا اقدام کرتے ہیں۔جو لوگ علماء کی مخالفت کر تے ہے اکثر آئے دن معاشرے میں اس طرح کے اقدامات کرتے ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں